انتخابی اجلاس مرکزی مجلس شوریٰ کی جھلکیاں 12-20 - ھفت روزہ اھل حدیث

تازہ ترین

Monday, April 06, 2020

انتخابی اجلاس مرکزی مجلس شوریٰ کی جھلکیاں 12-20


انتخابی اجلاس مرکزی مجلس شوریٰ کی جھلکیاں

تحریر: جناب عبدالرحیم قریشی
\          مرکزی جمعیۃ اہل حدیث پأکستان کی مجلس شوریٰ کا ’’انتخابی اجلاس‘‘ قرآن کالج ادارۃ الاصلاح ٹرسٹ پھولنگر قصور میں ۸ مارچ بروز اتوار زیر صدارت ڈاکٹر عبدالغفور راشد چیئرمین انتخابی بورڈ مرکزیہ منعقد ہوا۔
\          انتخابی اجلاس کا آغاز قاری صہیب احمد میر محمدی کی خوش الحان تلاوت قرآن مجید سے ہوا۔ جبکہ نقابت کے فرائض رانا محمد شفیق خاں پسروری ایڈیشنل سیکرٹری جنرل نے انجام دیئے۔
\          اجلاس کے آغاز پر امیر محترم سینیٹر پروفیسر ساجد میرd‘ ناظم اعلیٰ سینیٹر حافظ ڈاکٹر عبدالکریمd اراکین شوریٰ کے ساتھ ہی تشریف فرما تھے۔
\          مولانا عبدالرشید حجازی ممبر انتخابی بورڈ مرکزیہ نے ابتدائی کلمات میں اجلاس کی غرض وغایت اور انتخابی طریقہ کے حوالے سے گفتگو کی۔ جبکہ حافظ آصف مجید ممبر انتخابی بورڈ بھی الیکشن عمل میں ساتھ تھے۔
\          پنجاب‘ بلوچستان‘ خیبر پی کے‘ آزاد کشمیر اور بلتستان سے اراکین شوریٰ کی بہت بڑی تعداد اجلاس میں شریک ہوئی۔
\          دور دراز سے آنے والے اراکین شوریٰ نے رات کا قیام قرآن کالج میں ہی کیا جبکہ اراکین شوریٰ کی اکثریت رات بروقت پھولنگر پہنچ گئی۔
\          مرکزی جمعیۃ اہل حدیث ضلع قصور کی طرف سے آمدہ راستوں پر خیر مقدمی فلیکسز آویزاں کیے گئے تھے۔
\          انتخابی اجلاس کی سکیورٹی اہل حدیث یوتھ فورس کے نوجوان شاہینوں نے کی جبکہ قاری محمد سلیمان میر محمدی کی سربراہی میں طلبہ قرآن کالج ادارۃ الاصلاح ٹرسٹ بھی انتظامی معاملات میں پیش پیش تھے۔
\          مجلس شوریٰ کا انتخابی اجلاس ادارے کی خوبصورت اور جدید طرز پر تعمیر جامع مسجد کے ہال میں منعقد ہوا جہاں اراکین شوریٰ‘ علمائے کرام‘ شیوخ الحدیث اور مندوبین کی الگ الگ سیٹیں تھیں۔
\          سیالکوٹ‘ گوجرانوالہ‘ لاہور‘ سرگودھا‘ فیصل آباد‘ کوئٹہ‘ راولپنڈی ودیگر شہروں سے اراکین شوریٰ قافلوں کی شکل میں پھولنگر پہنچے۔
\          قرآن کالج کے داخلی گیٹ اور جامع مسجد کے درمیان راستے پر استقبالیہ کیمپ‘ مرکزی دفتر‘ شعبہ مالیات‘ صوبہ وڈویژنل وائز داخلہ کارڈز کے اسٹال لگے ہوئے تھے جہاں حافظ بابر فاروق رحیمی‘ راقم الحروف‘ رانا سیف الاسلام شاہد‘ عمران مجاہد‘ قاری عمران سلفی‘ حافظ محمد افضل‘ حافظ سیف الرحمن بٹ اور مرکزی جمعیۃ اہل حدیث ضلع قصور‘ اہل حدیث یوتھ فورس ضلع قصور کے کارکنان نے اپنے فرائض خوش اسلوبی سے انجام دیئے۔
\          جامع مسجد کے دروازے سے ملحقہ مرکزی جمعیت اہل حدیث کے ترجمان ہفت روزہ ’’اہل حدیث‘‘ کا سٹال تھا جہاں پر جناب میاں عبداللہ بخش اور عتیق الرحمن سرگرم عمل رہے۔
\          حافظ بابر فاروق رحیمی مسلسل معزز مہمانوں اور اسٹال پر موجود کارکنان کی رہنمائی ونگرانی کرتے رہے۔
\          پروفیسر عاصم حفیظ‘ نعیم ناصف‘ رانا امان اللہ‘ جہاں زیب درانی‘ کاشف‘ کامران‘ ودیگر افراد پر مشتمل پیغام ٹی وی کی ٹیم نے انتخابی اجلاس کی میڈیا کوریج کی جبکہ حافظ ندیم صاحب‘ یوسف سراج‘ فخر الاسلام اور محمد اشفاق گاہے بگاہے ان کی نگرانی کرتے رہے۔
\          امیر محترم سینیٹر پروفیسر ساجد میرd اور ناظم اعلیٰ ڈاکٹر حافظ عبدالکریمd کا انتخابی ہال پہنچنے پر پر تپاک استقبال کیا گیا۔
\          اجلاس کی کارروائی ہال میں موجود ایل سی ڈی سکرینز پر بھی دکھائی جاتی رہی۔
\          مولانا محمد نعیم بٹ‘ پروفیسر عبدالرحمن لدھیانوی‘ قاری محمد حنیف ربانی‘ مولانا خلیل الرحمن جاوید کراچی‘ سید سبطین شاہ نقوی‘ حافظ محمد یونس آزاد‘ پروفیسر حافظ شاہد امین‘ الشیخ مبشر احمد ربانی‘ پروفیسر مولانا محمد عمر صدیق‘ قاری عبدالحفیظ فیصل آبادی‘ حافظ عبدالباسط شیخوپوری‘ رانا خلیق پسروری‘ قاری خالد مجاہد‘ قاری محمد یعقوب فیصل آبادی‘ مولانا عبداللہ نثار‘ مولانا احمد حسن ساجد‘ قاری اسماعیل عتیق‘ قاری یٰسین بلوچ‘ مولانا ناصر مدنی‘ مولانا نواز چیمہ‘ مولانا ادریس گوہڑوی‘ مولانا قاری عنایت اللہ ربانی آف کھڈیاں‘ مولانا محمد حسین ظاہری ودیگر مرکزی جمعیۃ اہل حدیث کے نامور علمائے کرام کی کثیر تعداد نے اجلاس میں شرکت کی۔
\          مرکزی جمعیۃ اہل حدیث پاکستان کی تمام ذیلی تنظیمات کے سربراہان پروفیسر عتیق اللہ عمر‘ حافظ فیصل افضل شیخ‘ پروفیسر عطاء الرحمن ظہیر‘ حافظ عامر صدیقی‘ حکیم شاہد اقبال‘ مولانا عبدالغفار مکی‘ قاری نویدالحسن‘ وسیم عباس‘ ملک اویس‘ عصمت اللہ چھینہ نے اپنی اپنی تنظیمات کی نمائندگی کی۔
\          پروفیسر حافظ عبدالستار حامد‘ مفتی محمد یوسف محمدی‘ پروفیسر دانیال شہاب‘ مولانا عبدالغنی ضامرانی‘ علامہ روح اللہ توحیدی نے بالترتیب پنجاب‘ سندھ‘ آزاد کشمیر‘ بلوچستان اور صوبہ خیبر پی کے کی نمائندگی کی۔
\          علمائے کرام‘ شیوخ الحدیث‘ قراء کرام کی شرکت نمایاں تھی۔
\          جونہی چیئرمین انتخابی بورڈ نے انتخابی عمل کا اعلان کیا تو ہال میں سناٹا چھا گیا۔
\          مرکزی جمعیۃ اہل حدیث پاکستان کی امارت کے لیے سینیٹر پروفیسر ساجد میرd‘ نظامت کے لیے سینیٹر ڈاکٹر حافظ عبدالکریمd جبکہ ناظم مالیات کے لیے حاجی عبدالرزاق‘ قاری صہیب احمد میر محمدی اور سرگودھا کے حاجی سعید اختر کوہلی کے نام پیش ہوئے۔ اول الذکر دونوں سیٹ پر مد مقابل کوئی امیدوار سامنے نہ آنے اور ناظم مالیات کی سیٹ پر قاری صہیب احمد میر محمدی اور حاجی سعید اختر کوہلی کے دستبردار ہونے پر امیر محترم‘ ناظم اعلیٰ اور ناظم مالیات بلا مقابلہ منتخب ہو گئے۔
\          جونہی انتخابی نتائج کا اعلان ہوا ہال میں ’’تیرا میر میرا میر … ساجد میر ساجد میر‘‘ اور محسن جماعت ناظم اعلیٰ کے جذباتی نعرے گونجنے لگے۔
\          انتخابی بورڈ کے چیئرمین نے نو منتخب قیادت سے حلف لیا۔
\          انتخابی عمل کی تکمیل پر چیئرمین انتخابی بورڈ نے کرسی صدارت امیر محترم کے حوالے کر دی۔
\          مرکزی جمعیت اہل حدیث قصور شہر کے امیر مفتی بلال احمد‘ ثناء اللہ ثاقب اور عمران انصاری امیر محترم کو شہر قصور کی طرف سے ایک لاکھ روپے کا چیک پیش کیا گیا۔
\          مولانا عبدالرحمن ثاقب‘ مولانا حسن سموں نے صوبہ سندھ کی طرف سے منتخب قیادت کو اجرک کا تحفہ پیش کیا۔ جبکہ قرآن کالج ادارۃ الاصلاح کی طرف سے قاری صہیب احمد میر محمدی نے سینیٹر پروفیسر ساجد میر اور سینیٹر ڈاکٹر عبدالکریم کے لیے شیروانیاں تیار کروائیں۔
\          علامہ ابتسام الٰہی ظہیر‘ مفتی مبشر احمد ربانی‘ علامہ معتصم الٰہی ظہیر اراکین شوریٰ اور طلبہ کی خصوصی توجہ کا مرکز رہے۔
\          بعض اراکین شوریٰ اور ادارہ الاصلاح ٹرسٹ قرآن کالج کے اساتذہ وطلبہ مولانا ناصر مدنی کے ساتھ سیلفیاں بنواتے رہے۔
\          پروفیسر عتیق اللہ عمر‘ مولانا مبشر احمد مدنی‘ حافظ ظفر اللہ خاں علالت طبیعت کے باوجود اجلاس میں شریک ہوئے۔
\          قاری صہیب احمد میر محمدی نے امیر کی سمع واطاعت‘ وفاداری‘ جماعتی زندگی کی اہمیت وفضیلت‘ نائبین کے اوصاف وذمہ داری پر قرآن وسنت کی روشنی میں مدلل خطاب کیا اور معزز مہمانان واراکین شوریٰ کا شکریہ بھی ادا کیا۔
\          پروفیسر ڈاکٹر رانا تنویر قاسم انتخابی اجلاس کی ملکی میڈیا پر کوریج میں مصروف رہے۔ جونہی انتخابی نتائج کا اعلان ہوا لاہور رنگ سمیت بعض ٹی وی چینلز نے بریکنگ نیوز کے طور پر انتخابات کی خبر نشر کی۔
\          جب قاری صہیب احمد میر محمدی نے اپنے اختتامی خطاب میں پنجابی انداز میں یہ کہا کہ ’’بھراؤ کھانا کھاندیاں سنگنا نہ تے جے مک جائے تے ہور منگنا نہ‘‘ پر محفل کشت زعفران بن گئی۔
\          اجلاس میں حج فارم میں ختم نبوت کے حلف نامے کو ختم کرنے کی شدید مذمت کی قرار داد متفقہ طور پر منظور کی گئی اور اراکین شوریٰ نے اس کے خلاف تحریک چلانے کا مطالبہ بھی کیا۔
\          نو منتخب امیر سینیٹر پروفیسر ساجد میرd نے اپنے خطاب میں سابقہ ناظمین اعلیٰ اور اپنے قریبی جماعتی رفقاء علامہ عبدالعزیز حنیفa‘ میاں محمد جمیل‘ میاں نعیم الرحمن طاہرa‘ حاجی نذیر احمد انصاریa‘ حافظ عبدالعلیم یزدانیa‘ میاں محمود عباسa‘ منظور احمد شیخ کی جماعتی خدمات کو سراہا۔
\          شیخ الحدیث مولانا عبداللہ امجد چھتوی‘ مولانا عبدالسلام رستمی‘ مولانا طیب معاذ‘ مولانا عبدالوہاب خلجی‘ مولانا عبدالعزیز راشد‘ حکیم محمد ابراہیم طارق‘ مولانا محمد داؤد‘ مولانا محمد ابراہیم خلیل‘ مولانا فضل الرحمن ہزاروی‘ برادر علامہ احسان شیخ محبوب الٰہی‘ حاجی عبدالقیوم‘ خواجہ سیف الرحمن صدیقی‘ حافظ عبدالسمیع اوکاڑوی‘ شیخ الحدیث مولانا عبداللہ یوسف‘ حاجی سعید‘ مولانا نذیر احمد سبحانی‘ حاجی عبدالرشید اصغر (اللہ والے) ودیگر مرحومین کے لیے دعائے مغفرت کی گئی۔
\          ایک موقع پر جب امیر محترم نے اپنے خطاب میں احمد فراز کے ایک شعر   ؎
سنا ہے بولے تو باتوں سے پھول جھڑتے ہیں
یہ بات ہے تو پھر چلو بات کر کے دیکھتے ہیں
                کے حوالے سے قاری صہیب صاحب کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ’’کچھ پھول باقی رکھ لیا کریں سارے ہی نہ بکھیر دیا کریں۔‘‘ تو شرکائے محفل خوب محظوظ ہوئے۔
\          ’’میرا جسم میری مرضی‘‘ کے خلاف شعبہ خواتین مرکزی جمعیۃ اہل حدیث پاکستان کی ہزاروں خواتین نے جس طرح اپنا احتجاج ریکارڈ کروایا اس پر انتخابی اجلاس میں ان کو بھر پور خراج تحسین پیش کیا گیا۔
\          نو منتخب قائدین مرکزیہ سینیٹر پروفیسر ساجد میر‘ ناظم اعلیٰ سینیٹر ڈاکٹر حافظ عبدالکریم نے اراکین شوریٰ کی تشریف آوری اور جناب قاری صہیب احمد میر محمدی کا بہترین میزبانی اور انتظام کرنے پر ان کا اور ان کے رفقاء کا شکریہ ادا کیا۔
\          انتخابی اجلاس میں جماعت کے دستور میں ’’چیف آرگنائزر‘‘ کے عہدے سمیت بعض اہم وضروری ترامیم بھی کی گئیں۔
\          اجلاس کے اختتام پر سینیٹر پروفیسر ساجد میر‘ ناظم اعلیٰ سینیٹر حافظ عبدالکریم کو مبارکباد دینے والوں کا تانتا بندھ گیا۔ یہ سلسلہ ضیافت تک جاری رہا۔
\          دعائے خیر سے اجلاس کا اختتام اور مہمان شرکاء اپنی اپنی منزل کو روانہ ہو گئے۔
\          انتخابی اجلاس حاضری‘ انتظام وانصرام اور نظم وضبط کے حوالے سے کامیاب وشاندار رہا۔
\          قاری صہیب احمد میر محمدی‘ قاری سلیمان میر محمدی اور ان کے رفقاء مہمانوں کو تادیر الوداع کرتے رہے۔


No comments:

Post a Comment

Pages