عزت مآب سعودی سفیر نواف بن سعید المالکی﷾ مرکزی اہل حدیث لاہور آمد اور خطاب 20-19 - ھفت روزہ اھل حدیث

تازہ ترین

Monday, September 21, 2020

عزت مآب سعودی سفیر نواف بن سعید المالکی﷾ مرکزی اہل حدیث لاہور آمد اور خطاب 20-19

ھفت روزہ اھل حدیث، سعودی سفیر، نواف بن سعید المالکی، مرکز اھل حدیث 106 راوی روڈ لاھور، مرکزی لاھور، دفاتر اھل حدیث


عزت مآب سعودی سفیر نواف بن سعید المالکی﷾ مرکزی اہل حدیث لاہور آمد اور خطاب

اردو ترجمہ

بسم اللہ الرحمن الرحیم

الحمد للہ رب العالمین، والصلوۃ والسلام علی سید الأنبیاء والمرسلین، نبینا محمد  وعلی آلہ وصحبہ أجمعین،  أما بعد:

محترم المقام فضیلۃ الشیخ پروفیسر سینیٹر ساجد میر صاحب امیر مرکزی جمعیت اہلحدیث پاکستان‘ علمائے کرام ومشائخ عظام!

السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ

یہ پڑھیں:  عقیدتوں کے محور کا قومی دن

میرے لئے خوشی کا باعث ہے کہ میں ایک مرتبہ پھر اپنے بھائیوں، ذمہ دارانِ مرکزی جمعیت اہلحدیث پاکستان کے ساتھ نیکی کے راستے پر گامزن ہوں۔ خیر کے راستوں پر چلنا اس جمعیت کا شیوہ ہے۔ یہ جماعت فکر ومنہج کے لحاظ سے سعودی عرب کی قیادت، علماء اور عوام کی ہم فکر، مخلص اور بہترین دوست جماعت ہے۔

عزیزان گرامی! مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سعودی عرب کے ساتھ تعلقات بہت قدیم اور مضبوط ہیں۔ دونوں ملکوں کی تاریخ اس تعلقِ انسانی کی سچائی اور خلوص کی شاہد ہیں۔

معزز حاضرین مجلس! سعودی عرب کے حکمران، علماء، عوام، تعلیمی اور ثقافتی ادارے، پاکستانی عوام سے محبت اور ان کی قدر کرتے ہیں۔ اسی طرح سعودی حکومت اس بات کو بھی قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے کہ مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان نے ہر موقع پر بین الاقوامی اور علاقائی معاملات میں سعودی عرب کے مبنی بر عدل وانسانیت موقف کی ہمیشہ غیر مشروط اور مکمل حمایت کی ہے۔

عزیزان گرامی! مجھے اجازت دیجئے کہ میں چند منٹ سعودی عرب اور مرکزی جمعیت اہلحدیث پاکستان کی باہمی دوستی، اخوت اور وفا پر روشنی ڈالوں۔ بلکہ ایسے مضبوط تعلقات تقسیم ہند سے پہلے جمعیت اہلحدیث  برصغیر اور سعودی عرب کے درمیان تھے۔ مرکزی جمعیت اہل حدیث  کے بانیان اور سعودی عرب کے مؤسس امام عبدالعزیز بن عبدالرحمن آل سعودa کے درمیان برادرانہ اور مضبوط تعلقات تھے۔ اس وقت کی جمعیت اہلحدیث کی قیادت نے سعودی عرب کی مکمل تائید اور حمایت کی۔ سعودی عرب کو بدنام کرنے والے دشمنوں اور بدخواہوں کی کوششوں کو ناکام بنایا۔ مرکزی جمعیت اہل حدیث کے پر خلوص تعاون اور حمایت کی بنا پر شاہ عبدالعزیز کے وفا شعار بیٹے اور سعودی عرب کے حکمران جن میں سرفہرست خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود اور ولی عہد محمد بن سلمان ہیں۔ انہوں نے مرکزی جمعیت اہلحدیث کے علمائے کرام، دانشوروں اور اس کی قیادت کو  ہمیشہ دلی عزت و احترام دیا ہے۔

یہ پڑھیں:  ’’تحفظ نظریۂ پاکستان ریلی‘‘ گوجرانوالہ ... ایک نظر

سامعین محترم! سعودی عرب اور مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے مابین خوشگوار اور مضبوط تعلقات کی متعدد جہات ہیں؛ دینی اعتبار سے دونوں کے افکار ومنہج اور سوچ میں اتحاد ویگانگت ہے، دعوتی وتعلیمی مراکز اور اداروں میں اشتراک کا تعلق بھی ہے، مبلغین ومدرسین کی کفالت اور سعودی جامعات میں پاکستانی طلبہ کو سکالرشپ دینے کے اعتبار سے بھی ان میں گہرا تعلق ہے۔ آگہی و ثقافتی اعتبار سے بھی دونوں ممالک میں مضبوط تعلقات استوار ہیں۔

حضراتِ محترم! سعودی علماء ودانشوروں اور مرکزی جمعیت اہل حدیث کے علماء کے مابین تعلیمی وثقافتی تجربات کے تبادلے کی تاریخ بہت طویل اور گہری ہے۔ آج بھی علماء مرکزی جمعیت اہل حدیث اور علماء  ومبلغینِ سعودی عرب کے مابین بہت مضبوط اور گہرے تعلقات موجود ہیں، یہ ایک دوسرے سے سیکھتے سکھاتے رہتے ہیں۔ ثقافتی، علمی اور تحقیقی میدان میں یہ ایک دوسرے سے تجربات ومعلومات کا تبادلہ بھی کرتے رہتے ہیں۔ آج کا یہ خوبصورت اور مبارک اجتماع ان مضبوط تعلقات کی زبردست دلیل ہے۔ آج ہم جس کتاب کی تقریب رونمائی کے لیے اکٹھے ہوئے ہیں یہ امام حرمین شریفین ڈاکٹر عبد الرحمن السدیسd کے منتخب خطبات کا اردو ترجمہ ہے۔ اس خوبصورت اور علمی کتاب کی تیاری کا کریڈٹ مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کی نگرانی میں چلنے والے پیغام ٹی وی کے شعبہ ریسرچ کی پوری ٹیم کو جاتا ہے کہ انہوں نے بڑی محنت سے یہ خوبصورت گلدستہ تیارکیا۔ علمی، ثقافتی اور دعوتی اعتبار سے ان مبارک خطبات کو بڑی اہمیت اور عظیم مقام ومرتبہ حاصل ہے۔

یہ پڑھیں:  حرمین شریفین (نظم)

میں سمجھتا ہوں کہ دنیا میں بولی جانے والی تمام زبانوں میں ان خطبات کا ترجمہ کرنے کی ضرورت ہے۔ میں مبارکباد دیتا ہوں پیغام میڈیا گروپ کو جس نے ان خطبات کا اردو ترجمہ کرکے دنیا بھر میں پھیلے ہوئے اردو بولنے والے کروڑوں افراد کے لیے ایک خوبصورت تحفہ پیش کیا ہے۔ اللہ تعالیٰ سے دعا ہے کہ وہ آپ کی اس کاوش کو قبول فرمائے، کوششوں میں برکت عطا کرے اور آپ لوگوں کے ذریعے سے عوام الناس کو مزید فائدہ پہنچائے۔ ہم سب کو امت مسلمہ اور پوری انسانیت کی اصلاح وفلاح والے کام کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔ وصلی اللہ علی عبدہ ونبیہ محمد e۔والسلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ


No comments:

Post a Comment

Pages