کامیاب انسان 20-20 - ھفت روزہ اھل حدیث

تازہ ترین

Tuesday, September 29, 2020

کامیاب انسان 20-20

درس قرآن، ھفت روزہ اھل حدیث، کامیاب انسان


درسِ قرآن

کامیاب انسان

ارشادِ باری ہے:

﴿اِنَّمَا تُوَفَّوْنَ اُجُوْرَكُمْ يَوْمَ الْقِيٰمَةِ١ؕ فَمَنْ زُحْزِحَ عَنِ النَّارِ وَ اُدْخِلَ الْجَنَّةَ فَقَدْ فَازَ١ؕ وَ مَا الْحَيٰوةُ الدُّنْيَاۤ اِلَّا مَتَاعُ الْغُرُوْرِ۰۰۱۸۵﴾ (آل عمران)

’’قیامت کے دن تم اپنے بدلے پورے پورے دئیے جاؤ گے۔پس جو شخص آگ سے ہٹا دیا گیا اور جنت میں داخل کر دیا گیابے شک وہی کامیاب ہے۔ اور (یاد رکھوکہ)دنیا کی زندگی تو محض دھوکے کا سامان ہے۔‘‘

یہ پڑھیں:    تنزلی اور دنیوی عذاب کی وجہ

ہر انسان اپنے لیے کامیابی کا خواہاں ہوتا ہے اور حصول کامیابی کے لیے تگ و دو اور محنت ومشقت کرتا ہے۔لیکن عقل مند انسان وہ ہے جو حقیقی اور مستقل کامیابی کے حصول کے لیے کوشش کرے ایسی کامیابی کہ جس کے بعد ناکامی کا کوئی امکان ہی نہ ہو۔دنیا میں رہتے ہوئے انسان عارضی نفع اور تھوڑے سے فائدہ کے لیے بھی دن رات سو چ وبچار کرتا ہے اور اس کے باوجود اسے پورا وثوق نہیں ہوتا کہ وہ اس فائدہ کو پا لے گا۔لیکن اللہ تعالی نے ایسی دائمی کامیابی اور ابدی منافع کی طرف قرآن میں رہنمائی کردی ہے کہ جس کے بعد نامرادی نہیں اور اس کا حصول بھی کسی قسم کے شک وشبہ سے بالا ہے اور حقیقت میں یہی اصل کامیابی ہے:

﴿قَالَ اللّٰهُ هٰذَا يَوْمُ يَنْفَعُ الصّٰدِقِيْنَ صِدْقُهُمْ١ؕ لَهُمْ جَنّٰتٌ تَجْرِيْ مِنْ تَحْتِهَا الْاَنْهٰرُ خٰلِدِيْنَ فِيْهَاۤ اَبَدًا١ؕ رَضِيَ اللّٰهُ عَنْهُمْ وَ رَضُوْا عَنْهُ١ؕ ذٰلِكَ الْفَوْزُ الْعَظِيْمُ۰۰۱۱۹﴾ (المآئدة)

’’اس دن اللہ تعالیٰ فرمائیں گے یہ وہ دن ہے کہ جو لوگ سچے تھے ان کا سچا ہونا ان کے کام آئے گا‘ ان کو ایسے باغات میں ٹھہرایا جائے گا جن کے نیچے سے نہریں بہتی ہوں گی ان میں وہ ہمیشہ ہمیشہ رہیں گے۔اللہ ان سے خو ش ہوا اور وہ اللہ سے راضی ہوئے۔یہی بڑی کامیابی ہے۔‘‘

اور یہ کامیابی ان کا مقدر بنے گی جنہوں نے دنیا میں رہتے ہوئے اللہ کی مرضی والی اور رسولe کی اطاعت والی زندگی گزاری ہوگی:

﴿اَلَاۤ اِنَّ اَوْلِيَآءَ اللّٰهِ لَا خَوْفٌ عَلَيْهِمْ وَ لَا هُمْ يَحْزَنُوْنَۚۖ۰۰۶۲ الَّذِيْنَ اٰمَنُوْا وَ كَانُوْا يَتَّقُوْنَؕ۰۰۶۳ لَهُمُ الْبُشْرٰى فِي الْحَيٰوةِ الدُّنْيَا وَ فِي الْاٰخِرَةِ١ؕ لَا تَبْدِيْلَ لِكَلِمٰتِ اللّٰهِ١ؕ ذٰلِكَ هُوَ الْفَوْزُ الْعَظِيْمُؕ۰۰۶۴﴾ (يونس)

’’یاد رکھو!اللہ کے دوستوں پر کوئی اندیشہ ہے اور نہ وہ غمگین ہوتے ہیں۔وہ ‘ وہ ہیں جو ایمان لائے اور (برائیوںسے)پرہیز کیے رکھا۔ان کے لیے دنیاوی زندگی میں بھی اور آخرت میں بھی خوش خبری ہے۔اللہ تعالیٰ کی باتیں بدلا نہیں کرتیںاور یہی بڑی کامیابی ہے۔‘‘

یہ پڑھیں:    اجتماعی آزمائش اور دو گروہوں کا کردار

دنیا میں رہتے ہوئے اللہ تعالیٰ کا خوف دلوں میں بٹھائے رکھنا ‘ حق اور سچ کا ساتھ دینا‘ اس کے بھیجے ہوئے رسولe کی اطاعت کے ذریعے اللہ کی رضا کا متلاشی رہناہمارے لیے حقیقی اور ابدی کامیابی کاضامن ہے اورایک مومن کے سامنے اسی کامیابی کا حصول ہدف زندگی ہونا چاہیے۔

 

درس بخاری شریف


دینی مدارس کے طلبہ کے لیے انتہائی مفید


No comments:

Post a Comment

Pages